Official Web

پاس ورڈ غیر محفوظ ہونے پر گوگل کروم فوراً بتائے گا، نیا فیچر متعارف

لاہور:  دنیا بھر میں انٹر نیٹ پر صارفین کچھ بھی سرچ کرنے کے لیے مختلف براؤزر استعمال کرتے ہیں، کچھ لوگ کروم جبکہ کچھ فائر فاکس کو ترجیح دیتے ہیں اسی دوران صارفین چاہتے ہیں ان کی پرائیویسی کسی کے ہاتھ میں نہ لگے اس کے لیے مختلف طرز کے اقداماٹ اُٹھائے جاتے ہیں اسی طرح کی خبر کروم براؤزر کی طرف سے آئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مقبول سرچ انجن گوگل نے کروم براؤزر میں صارفین کے پاس ورڈ کی حفاظت اور ڈیٹا ہیکرز سے بچانے کے لیے نئے اور اہم فیچر کے اضافے کا اعلان کیا ہے۔

اکتوبر میں گوگل نے کروم صارفین کے پاسورڈ کی حفاظت کے لیے پاسورڈ منیجر ایپ کی شکل میں ایک ویب پیج متعارف کرایا تھا جس کے ذریعے معلوم کیا جا سکتا تھا کہ انکے تمام سیو پاسورڈز گوگل کروم میں کس حد تک محفوظ ہیں اور ہیکنگ کا سامنا تو نہیں ہوا۔

اب گوگل نے کروم صارفین کے پاس ورڈ اور ڈیٹا کی خاص حفاظت کو مدنظر رکھتے ہوئے مذکورہ ویب پیج کو بطور فیچر شامل کرنے کا اعلان کیا ہے۔

گوگل کے مطابق کروم میں نیا فیچر شامل کیا جا رہا ہے جو پاس ورڈ یا ڈیٹا ہیک ہونے کی صورت میں صارفین کو فوراً خبردار کر دے گا۔

یعنی جب کروم صارفین پاس ورڈ لاگ اِن کریں گے تو براؤزر کی جانب سے مطلع کر دیا جائے گا کہ صارف کا پاس ورڈ اُن کا ڈیٹا ہیک کرنے کے نتیجے میں کوئی استعمال کر چکا ہے۔

کروم صارفین کو نئے فیچر کے تحت یہ بھی بتا دیا جائے گا کہ ان کا ہیک ہونے والا پاس ورڈ کتنی مختلف سائٹس پر استعمال کیا جا رہا ہے، ساتھ ہی پاس ورڈ تبدیل کرنے کا آپشن بھی مہیا کیا جائے گا۔

اس فیچر کی مدد سے سہولت ہو گی کہ کروم صارفین کو کسی اگلی ونڈو پر جاکر اپنے خفیہ کوڈ کی حفاظت سے متعلق جاننا نہیں پڑے گا بلکہ اسی وقت انہیں ڈیٹا اور پاس ورڈ کی حفاظت کے حوالے سے ہدایت فراہم کی جائے گی۔

گوگل کا کہنا تھا کہ نیا فیچر گوگل سیف براؤزر ڈیٹا بیس پر بنایا جائے گا جو پہلے سے 30 فیصد زیادہ مؤثر طور پر صارفین کے پاس ورڈز اور ان کی معلومات محفوظ رکھے گا۔ گوگل کروم کا نیا حفاظتی فیچر آئندہ ہفتے متعارف کرایا جائے گا۔

Comments
Loading...