Official Web

مصباح الحق کی روایتی سلیکشن نے رمیز راجہ کا دل توڑ دیا

کراچی: مصباح الحق کی روایتی سلیکشن نے رمیز راجہ کا دل توڑ دیا۔

سابق کپتان اور موجودہ کمنٹیٹر رمیز راجہ نے اپنی یو ٹیوب ویڈیو میں نئے چیف سلیکٹر و ہیڈ کوچ کو پہلے خود کو بچائو والی حکمت عملی پر تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

57 سالہ رمیز نے کہاکہ دوسرے درجے کی سری لنکن ٹیم سے میچز کے باوجود مصباح کی جانب سے کسی نئے نام کے انتخاب کو نہ دیکھ کر کافی مایوسی ہوئی، ویسے اس کی توقع بھی تھی کیونکہ یہ ان کی پہلی بڑی آزمائش تھی جس میں انھوں نے پہلے سے ہی آزمائے ہوئے کھلاڑیوں پر ہی انحصار کیا مگر میں سمجھتا ہوں کہ مستقبل کیلیے آپ کو غیرمعمولی سوچ اپنانے کی ضرورت ہے،انھیں لازمی طور پر 4، 5 ایسے لڑکوں کو کیمپ میں بلانا چاہیے تھا جوباصلاحیت ہیں اور مستقبل میں پاکستان کے کام آسکتے، ان کے بجائے ایسے کھلاڑیوں کو دوبارہ طلب کیا گیا جو گذشتہ 10 برس سے ملک کیلیے کھیل رہے اور ہم ان کی قابلیت کے بارے میں اچھی طرح جانتے ہیں۔
رمیز راجہ نے کہاکہ میں اس بات کی اہمیت کو سمجھتا ہوں کہ آپ اپنی ٹیم کے کچھ بنیادی کھلاڑیوں کو ڈسٹرب نہیں کرسکتے، مگر ان کے گرد کچھ نئے پلیئرزکو ضرور سیکھنے کا موقع فراہم کیا جا سکتا ہے۔ ممکنہ کھلاڑیوں میں کسی بھی انڈر 19 یا انڈر 23 پلیئر کو نہ دیکھ کر کافی مایوسی ہوئی۔

رمیز راجہ نے قائداعظم ٹرافی میں سپورٹنگ وکٹوں کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ میں پہلے رائونڈ میں بڑا اسکور کرنے والے بیٹسمینوں کو مبارکباد دیتا ہوں، انھیں لمبی اننگز کھیلتے ہوئے دیکھنا اچھا اور یہ ایک عمدہ عادت ہے لیکن اس کے ساتھ گیند اور بیٹ میں توازن بھی ضروری ہے،اس کے لیے پچزکا معیار بہتر بنانا ہوگا،اس سے ہر کسی کی دلچسپی برقرار رہے گی۔

Comments
Loading...