Official Web

وزیراعظم ناکام ہونے پر اداروں کو سیاست میں ملوث کر رہے ہیں: احسن اقبال

لاہور:  مسلم لیگ کے سینئر رہنما اور ایم این اے احسن اقبال کا کہنا ہے کہ سلیکٹو وزیراعظم ناکام ہونے پر قومی اداروں کوسیاست میں ملوث کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مسلم لیگ ن کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما شاہد خاقان عباسی کی گرفتاری کی بھرپور مذمت کرتے ہیں۔ ان کی گرفتاری انتقامی کارروائی ہے، ایل این جی ڈیل میں انہی کی بدولت ملکی خزانے کے اربوں ڈالر بچائے گئے۔

مسلم لیگ کے سینئر رہنما کا کہنا تھا کہ حکومتی دھمکیوں سے ڈرنے والے نہیں، میاں محمد نواز شریف کو فوراً جیل سے رہا کیا جائے۔ انہیں بے گناہ عدالت میں رکھا گیا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت کی پالیسیوں کی وجہ سے دس لاکھ افراد بے روزگارہو چکے ہیں۔ ان کو ملک چلانا نہیں آتا صرف پگڑیاں اچھالنی آتی ہے۔، ہم سب کوجیل میں ڈال دوغریب کوسستی چینی،بجلی اورگیس تو دو۔ اس سال مہنگائی کی شرح72سالوں سے زیادہ ہونے جا رہی ہے۔ ہمارے ساتھ جومرضی کرلو،عوام کوریلیف دو۔

احسن اقبال کا مزید کہنا تھا کہ ہم حکومت کی انتقامی کارروائیوں سے گھبرانے والے نہیں۔ پروڈکشن آرڈرجاری کرے یا نہ کریں مہنگائی،بے روزگاری میں پسے ہوئے عوام کی آوازاسمبلی میں اٹھائیں گے۔

سابق وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ سینیٹ میں اپوزیشن کے پاس دوتہائی اکثریت ہے، حکومت اگر ہارس ٹریڈنگ نہ کرے تو چیئرمین سینیٹ کو اخلاقی طور پر مستعفی ہو جانا چاہیے تھا۔ سینیٹ کے چیئر مین میر حاصل بزنجو ہونگے۔ اپوزیشن حکومت کے ہتھکنڈوں کوناکام بنائے گی۔ حکومت فوری طور پر سینیٹ کا اجلاس بلائے، فرار نہیں ہونے دیں گے

مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما کا کہنا تھا کہ کارکنوں کیخلاف جھوٹے مقدمات بنائے جا رہے ہیں، عمران خان کو ہٹلر نہیں بننے دیں گے، واپس ڈی چوک بھجیں گے۔ چیف جسٹس سپریم کورٹ سے درخواست کرتا ہوں ناانصافی کا ازالہ کریں، ثابت ہوگیا نوازشریف کیخلاف فیصلہ دباؤ میں دیا گیا۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ 25 جولائی کو قومی مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈالا گیا، پارٹی 25 جولائی کویوم سیاہ منائے گی، لاہور، اسلام آباد میں جلسہ ہو گا، پچیس جولائی کو پشاورمیں مرکزی جلسہ ہوگا۔

Comments
Loading...