Official Web

5سالہ ٹیکسٹائل پالیسی کی تشکیل کیلیے ٹاسک فورس تشکیل

کراچی: 

وفاقی حکومت نے برآمدات میں فروغ کی غرض سے 5سالہ ٹیکسٹائل پالیسی 2019-24 کی تشکیل کیلیے 17 رکنی ٹاسک فورس تشکیل دیدی ہے۔

وزارت تجارت وٹیکسٹائل (ٹیکسٹائل ڈویژن) کے جاری کردہ نوٹیفکیشن میں ٹیکسٹائل سیکٹر کے بڑے اور تجربہ کار برآمد کنندگان کوٹاسک فورس کے ارکان کے طور پر نامزد کیا گیاہے۔ نوٹیفکیشن کوگزٹ آف پاکستان کی اگلی اشاعت پارٹ ون میں شائع کرنے کے لیے بھیج دیا گیاہے۔

ٹاسک فورس کے ارکان میں سابق وفاقی وزیرخزانہ سلمان شاہ بھی شامل ہیں جنھیں ٹاسک فورس کا چیئرمین مقرر کیا گیاہے جبکہ ٹاسک فورس میں ایک نمائندہ ٹیکسٹائل ڈویژن سے اور بقیہ15ارکان نجی شعبے سے لیے گئے ہیں۔

حیرت انگیز طور پر ٹاسک فورس میں ٹیکسٹائل ایسوسی ایشنز خصوصاً ویلیو ایڈڈ ٹیکسٹائل ایسوسی ایشنز کے چیئرمینز کوشامل نہیں کیا گیا، تاہم ٹاسک فورس میں ٹیکسٹائل سیکٹر کے کئی بڑے ناموں کواہمیت دی گئی ہے۔ بعض ایسی ٹیکسٹائل کمپنیوں کے عہدیداروں اور ڈائریکٹرز کوبھی شامل کیا گیاہے جن کی برآمدات زیادہ نہیں۔

ٹاسک فورس میں ویلیو ایڈڈ سیکٹر کے لیڈر پاکستان ٹیکسٹائل فورم کے چیئرمین جاوید بلوانی،بشیر علی محمد چیئرمین اور سی ای او گل احمد ٹیکسٹائلز، ظفر اقبال سرور سی ای او زیڈ آئی ایس ٹیکسٹائلز فیصل آباد،احسن بشیر سورج کاٹن ملز، شاہد عبداللہ سفائر ٹیکسٹائل ملز، نوید احمد انڈس ٹیکسٹائلز ،عامر فیاض کوہ نور ملز، احمد کمال سی ای او کمال گروپ،خرم صداقت ٹیکسٹائلز، شبیراحمد فیروز 1888 لمیٹڈ ،شاہد سورتی سورتی انٹرپرائزز، میاں احسان یو ایس اپیرل، شہزاد سلیم اصغرا سٹائل ٹیکسٹائلز، مصدق ذوالقرنین انٹرلوپ اور شاہد نذیر احمد مسعود ٹیکسٹائل ملز لمیٹڈ شامل ہیں۔

Comments
Loading...