Official Web

امریکی نمائندہ زلمے خلیل زاد پاکستان سمیت چارملکی دورہ پر روانہ

واشنگٹن:  امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغانستان زلمے خلیل زاد پاکستان، افغانستان سمیت چار ملکی دورہ پر روانہ ہو گئے جس کے دوران وہ افغانستان میں قیام امن کے حوالے سے خطے کے ممالک کی سیاسی حمایت حاصل کرنے کی کوشش کریں گے۔

افغان حکومت اور طالبان کےدرمیان براہ راست مذاکرات کی کوششوں میں ناکامی کے بعد طالبان نے امریکہ سے بھی مذاکرات سے انکار کر دیا ہے۔ امریکی محکمہ خارجہ کے مطابق زلمے خلیل زاد 8 سے 21 جنوری تک بھارت، چین، افغانستان اور پاکستان کا دورہ کریں گے، دورے کے دوران زلمے خلیل زاد افغان حکومت اوردلچسپی رکھنے والے گروہوں کے ساتھ ملاقات اور افغانستان میں مفاہمتی عمل کے لئے بات چیت کریں گے۔

امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق امریکا 40 سال سے جاری افغان تنازعہ کے پرامن حل کے لئے ہر کاوش کے ساتھ ہے، امید ہے کہ افغانستان دوبارہ کبھی دہشت گردی کے پلیٹ فارم کے طور پراستعمال نہیں ہوگا، امریکا کا مقصد ہے کہ مذاکرات کے ذریعے دیکھا جائے کہ تنازعہ کا خاتمہ کیسے ہو اورہمارا مقصد ہے کہ تمام فریقین کو مذاکرات کی میزپرلایا جائے۔

امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ایسا حل نکلے جس میں تمام افغان قانون کے مطابق مشترکہ ذمہ داری محسوس کریں، افغان تنازعہ کا واحد حل یہ ہے کہ تمام فریقین مل کرایک ساتھ بیٹھیں اورمل بیٹھ کرایسے معاہدہ پر پہنچیں جوسب کے لیے قابل قبول ہو۔

Comments
Loading...